42

پیراگون ہاﺅسنگ سکینڈل کیس، خواجہ برادران پر فرد جرم عائد

لاہور (اب نیوز) احتساب عدالت نے پیراگون سکینڈل کیس میں خواجہ سعد رفیق اور سلمان رفیق پر فردجرم عائدکردی،ملزمان نے عدالت کے رو برو صحت جرم سے انکار کردیا، عدالت نے آئندہ سماعت پر گواہوں کو طلب کرلیا۔تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں خواجہ برادران کیخلاف پیراگون ہاﺅسنگ سکینڈل کیس کی سماعت ہوئی، نیب کی ٹیم نے خواجہ برادران کو احتساب عدالت میں پیش کردیا، اس موقع پر سکیورٹی کے سخت انتطامات کئے گئے تھے،لیگی کارکنوں اور رہنماﺅں کی بڑی تعداد احتساب عدالت میں موجود تھی،عدالت نے ملزموں کو ریفرنس کی کاپیاں براہم کردیں، خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ میرے وکیل ابھی موجود نہیں کچھ دیر انتظار کرلیں ،میرے وکیل ساتھ والی عدالت میں ہیں انہیں آنے دیں ،عدالت نے کہا کہ ہم آپ پر فردجرم عائد کرتے ہیں ،آپ کہتے ہیں تو آپ کو فردجرم پڑھ کر سنادیں.

مزید پڑھیں: پلواما حملہ انٹیلی جنس کی ناکامی کی وجہ سے ہوا ،بھارتی سی آر پی ایف کی انکوائری رپورٹ نے مودی سرکار کے جھوٹ کا بھانڈا پھوڑ دیا

خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ میں بے گناہ ہوں اور ٹرائل میں ثابت کروں گا،عدالت نے کہا کہ آپ بتائیں کہ آپ نے دستخط کرنے ہیں یا نہیں ،عدالت نے خواجہ سعد رفیق اور خواجہ سلمان رفیق پر فرد جرم عائد کردی،خواجہ برادران نے عدالت کے رو برو صحت جرم سے انکار کردیا،عدالت نے آئندہ سماعت پر گواہوںکو طلب کرلیااورملزموں کو ریکارڈ کی کاپیاں فراہم کردیں،عدالت نے کیس کی سماعت 13 ستمبرتک ملتوی کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

پیراگون ہاﺅسنگ سکینڈل کیس، خواجہ برادران پر فرد جرم عائد” ایک تبصرہ

اپنا تبصرہ بھیجیں