37

نیب کا مریم نواز کے اثاثے منجمد کرنے کا فیصلہ

لاہور : قومی احتساب بیورو ( نیب ) نے چودھری شوگر ملز کیس میں سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز اور بھتیجے یوسف عباس کے اثاثوں کو منجمد کرنے کا فیصلہ کر لیا، متعلقہ بینکوں کو جلد خطوط لکھے جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق شریف خاندان کے افراد کی مشکلات میں مزید اضافہ ہوگیا، نیب نے چودھری شوگر ملز کیس میں سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز اور بھتیجے یوسف عباس کے اثاثوں کی منتقلی اور فروخت کو روکنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ دونوں کے بینک اکاؤنٹس کو منجمد کرنے کے لیے متعلقہ بینکوں کو جلد خطوط لکھے جائیں گے۔

خیال رہے مریم نواز اور بھتیجے یوسف عباس چودھری شوگر ملز کیس میں 4 ستمبر تک جسمانی ریمانڈ پر ہے، تفتیشی رپورٹ میں ایک اور شوگر مل کا انکشاف ہوا اور بتایا گیا مریم نواز، نوازشریف اور شریک ملزموں نے 2000ملین کی منی لانڈرنگ کی ، ان کےاثاثے ذرائع آمدن سے مطابقت نہیں رکھتے۔

مزید پڑھیں: پنکھا خراب ہونے پرہوٹل مالک کاکمسن ویٹرپروحشیانہ تشدد

یاد رہے نیب لاہور نے نوازشریف کے خلاف چوہدری شوگر ملز کیس کی تحقیقات شروع کرتے ہوئے انہیں جیل میں سوالنامہ ارسال کردیا ہے۔

واضح رہے 8 اگست کو نیب نے چوہدری شوگرملز منی لانڈرنگ کیس میں مریم نوا ز کو تفتیش کے لئے بلایا گیا تھا لیکن وہ نیب دفترمیں پیش ہونے کے بجائے والد سے ملنے کوٹ لکھپت جیل چلی گئیں، مریم نواز ملاقات کر کےنکلیں تو نیب ٹیم نے انھیں گرفتار کرلیا تھا جبکہ نواز شریف کے بھتیجے یوسف عباس کو بھی گرفتار کیاتھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں