32

فرانس میں کشمیر کی موجودہ صورتحال پر بھارت مخالف مظاہرہ

فرانس میں بھارت کے یوم آزادی پر سیاہ پرچم لہرا دیے گئے، مقبوضہ کشمیر کی حیثیت یکطرفہ بدلنے پر ایفل ٹاور کے سامنے مظاہرہ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق پیرس کے اہم مقام ایفل ٹاور کے سامنے سیکڑوں پاکستانی اور کشمیریوں نے پر جوش انداز میں یوم سیاہ منایا، مظاہرین 2 گھنٹے تک مودی سرکار کے خلاف نعرے لگاتے رہے۔

مقررین کا مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہو رہی ہےلیکن اس کے باوجودکشمیری بھار تی فوج کے سامنے ڈٹے ہوئے ہیں اور دنیا سے مطالبہ کر رہے ہیں کہ کشمیر میں استصواب رائے کروایا جائے۔

مظاہرین نے پاکستان اور کشمیر کے جھنڈے اٹھا رکھے تھے۔

اس مظاہرہ کی کال تمام سیاسی اور مذہبی جماعتوں نے مشترکہ طور پر دی تھی جبکہ مظاہرے میں مسلمانوں کے ساتھ سکھ برادری نے بھی بڑی تعداد میں شرکت کی ۔

احتجاج میں شریک افراد نے فرانس اور یورپی یونین سے مطالبہ کیا کہ وہ بھارت کو یکطرفہ اقدام واپس لینے پر مجبور کرے۔

واضح رہے کہ 5 اگست کو بھارت نے آرٹیکل 370 کو ختم کرکے کشمیر کی آئینی حیثیت ختم کر دی تھی جس کے بعد پاکستان سمیت دنیا بھر میں کشمیر کے حق میں مظاہرے کئے جارہے ہیں جبکہ آج اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے تنازعہ کشمیر پر بات چیت کے لئے اجلاس طلب کررکھا ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں