40

بھارت کاکشمیرکواندرونی معاملہ قراردیناغلطی ہے،شاہ محمودقریشی

وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نےمیڈیاپربریفنگ دیتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان نے بھارتی اقدامات کے خلاف سلامتی کونسل میں جانے کا فیصلہ کیا ہے، بھارت کے 9لاکھ فوجی مقبوضہ کشمیر میں تعینات ہیں۔

شاہ محمود قریشی نےکہا کہ بھارتی وزیرخارجہ نے معاملےپرٹال مٹول کرتےہوئے کہاہے کہ یہ معاملہ اندرونی ہے ہم اس کومسترد کرتے ہیں۔

وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی کا کہناتھاکہ بھارت نےمقبوضہ کشمیرکوجیل میں تبدیل کردیاہے۔مقبوضہ کشمیر اقوام متحدہ میں قراردیا گیا ایک اہم تنازع ہے۔مقبوضہ کشمیر سے متعلق بھارتی موقف کو مسترد کرتے ہیں

وزیرخارجہ کاکہناتھا کہ مقبوضہ کشمیر ایک بین الاقوامی تنازع ہے، بھارت کی جانب سے کشمیرکو اندرونی معاملہ قراردیناغلطی ہے۔

وزیرخارجہ نےکہاکہ یورپی یونین کوباآورکرادیا کہ بھارت مذاکرات سے کتراتا ہے، بھارت نےصدرٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش مسترد کردی۔

شاہ محمودقریشی نےکہاکہ بھارت کب تک 1کروڑ40 لاکھ کشمیریوں کوقیدمیں رکھےگا، فیصلہ کرلیاگیاہےکہ سمجھوتہ ایکسپریس نہیں چلے گی۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کامزیدکہناتھاکہ یورپی یونین کشمیرپرڈائیلاگ میں کرداراداکرےتوپاکستان تیار ہے، پاکستان نے فضائی حدود محدود نہیں کیں، پاکستان کی جانب سے فضائی حدود محدود کرنے کی خبرغلط ہے۔

وزیرخارجہ نےکہاکہ خدشہ ہےکہ بھارت دنیاکی توجہ ہٹانےکیلئےپلوامہ ٹوجیسا ڈرامہ رچاسکتاہے، پاکستان کسی بھی جارحیت کےخلاف سیف گارڈلےگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں