37

مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے سے بھارت بے نقاب ہوگیا، سردار مسعود خان

صدرآزاد کشمیرمسعود خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے سے بھارت بے نقاب ہوگیا، بھارت 70 سال سے مقبوضہ کشمیر پر قابض ہے۔

صدر آزاد جموں و کشمیرسردار مسعود خان نےمزید کہا کہ بھارتی اقدام سلامتی کونسل کی قرارداد 91، 122 کی کھلی خلاف ورزی ہے، آرٹیکل 370 ، 35 اے کے خاتمے کا تحریک آزادی پر کوئی اثر نہیں پڑے گا، آرٹیکل 370 بھارت نواز جماعتوں کی وفاداریاں خریدنے کے لیے بنایا گیا تھا۔

سردار مسعود خان نے مزید کہا کہ بھارت کوپاکستان کےخلاف بھی جارحانہ اقدامات سے روکنا ہوگا،دفترخارجہ عالمی فورمز پر بھرپورطریقے سے کشمیر کا معاملہ اٹھارہا ہے،بھارت کسی صورت کشمیریوں سےحق خودارادیت نہیں چھین سکتا۔

واضح رہے کہ بھارتی صدرنےمقبوضہ کشمیر کی 4 نکاتی ترامیم پردستخط کردیئے جس کے بعد بھارتی آئین میں مقبوضہ کشمیرکی خصوصی حیثیت ختم ہو گئی۔

صدارتی حکم نامہ جاری کیا گیا ہے جس کے مطابق مقبوضہ جموں کشمیرکی علیحدہ قانون سازاسمبلی ہوگی ، لداخ کومقبوضہ کشمیر سےالگ کردیا گیا بھارتی صدرنے گورنرکا عہدہ ختم کردیا اوراختیارات کونسل آف منسٹرزکوتفویض کر دیئے ،کالے قانون میں مقبوضہ جموں کشمیرآج سےبھارتی یونین کاعلاقہ تصورہوگا ،کالےقانون میں مقبوضہ جموں کشمیراب ریاست نہیں کہلائے گی۔.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں