47

منشیات برآمدگی کیس،رانا ثنا اللہ کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع

لاہور( آن لائن)مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر راناثنااللہ کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع کردی گئی ،عدالت نے حکم دیا ہے کہ ملزموں کا 3 روز میں چالان پیش کیا جائے۔تفصیلات کے مطابق اے این ایف نے منشیات کیس میں گرفتار ن لیگ پنجاب کے صدر رانا ثنا اللہ اور ان کے ساتھیوں کو جوڈیشل مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کردیا،اس موقع پر سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے،وکیل رانا ثنا اللہ نے کہا کہ رانا ثنااللہ کو دل کی تکلیف ہے ، ابھی تک چالان پیش نہیں کیا ، وکیل رانا ثنااللہ نے کہا کہ ہمیں سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ، ہماری فائل ، ادویات ،موبائل ان کے پاس ہے ،وکیل نے کہا کہ ایسی کونسی چیز ہے جو فائل کو پیش نہیں کیا جارہا ، عدالت نے کہا کہ جب تک فائل نہیں آتی کیس کی سماعت نہیں ہو گی ،جب تک اے این ایف حکام ریکارڈ پیش نہیں کرتے اس وقت تک کیس ملتوی کردیتے ہیں، مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر رانا ثنا اللہ نے جج سے مکالمہ کرتے ہوئے کہاکہ مجھے ابھی ریکارڈ نہیں ملا،کل ایک ٹیم نے تفتیش کی،تمام تفصیلات مجھے ابھی تک نہیں دی گئیں،ابھی تک میرا موقف بھی سرکاری طور پر نہیں لکھا گیا،عدالت نے راناثنااللہ کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع کردی گئی ،عدالت نے حکم دیا ہے کہ ملزموں کا 3 روز میں چالان پیش کیا جائے،عدالت نے ملزموں کو 29جولائی کودوبارہ پیش کرنے کاحکم دیدیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں